News 28 November 2018

یمن میں آل سعود کو عبرت ناک شکست ہوگی،سید قاسم شمسی ٓٓ

یمن میں ہر گھنٹے ایک بچہ بھوک کی وجہ سے مر جاتا ہے،مرکزی صدر کی گفتگو۔

آئی ایس او پاکستان کے مرکزی صدر سید قاسم شمسی نے لاہور میں طلبہ کے وفد سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ مشرق و مغرب میں دنیا ظلم و ستم سے بھر ی ہوئی ہے اور بشریت ظلم و ستم سے تنگ آچکی ہے یمن میں نہتے مسلمانوں پر ظلم و ستم کا سلسلہ جاری ہے آل سعود امریکہ کی حمایت کے سائے میں یمنی مسلمانوں کو اپنی بہیمانہ اور مجرمانہ کارروائیوں کا نشانہ بنائے ہوئے ہے بربریت اور جارحیت کے نتیجے میں ہزاروں بےگناہ مسلمان شہید ہوچکے ہیں جن میں اکثریت بچوں اور عورتوں کی ہے۔

دورحاضر میں اسلامی دنیا مشکلات کا شکار ہے اور سب سے بڑی مشکل یہ ہے کہ مشکلات کے اسباب نہیں جانے جاتے۔ یمن سمیت بہت سے ممالک آج بھی جنگ اور بھوک و افلاس کا شکار ہیں اب تک 85ہزار یمنی بچے شہید ہوچکے ہیں۔ یمن میں ہر گھنٹے ایک بچہ بھوک کی وجہ سے مر جاتا ہے۔ بچوں کی موت کا ایک اہم سبب بھوک اور ناقص غذا ہے جو مرغن اور لذیذ لقموں سے پر تر و تازہ سعودی شہزادوں کی دین ہے لیکن بدقسمتی سے اسلامی ممالک نے یمن میں جاری اس انسانیت سوز ظلم پہ چپ سادھ رکھی ہے یمن پر آل سعود کی ایسی وحشیانہ جارحیت جاری ہے جسکی دنیا میں مثال نظر نہیں آتی۔

اس ظلم و جارحیت کے دوران شہریوں کے قتل عام اور وبائی امراض میں مبتلا کرنے کے آل سعود کوئی اور کارنامہ انجام نہیں دے سکا۔یمنی عوام حقیقی عاشق رسول ﷺ ہیں روز ولادت حضرت محمد ﷺپہ یمن میں جم غفیر اس بات کی عملی دلیل ہے کہ وہ غیور مسلمان ہیں اور اپنے حقوق کے حصول کی جدوجہد کو جاری رکھیں گے۔آل سعود کی یمن میں بربریت کے باوجود فتح یمنی عوام کی ہوگی اورامریکہ سمیت تمام اتحادیوںکو عبرت ناک شکست ہوگی

News 25 November 2018

برادر قاسم شمسی آئی ایس او پاکستان کے نئے میر کارواں منتخب

برادر قاسم شمسی آئی ایس او پاکستان کے نئے میر کارواں منتخب

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے سالانہ کنونشن میں قاسم شمسی کو نیا میرِ کارواں منتخب کر لیا گیا۔ آئی ایس او کے علی رضا آباد مرقدِ شہید ڈاکٹر محمد علی نقوی پر ہونیوالے امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے سالانہ کنونشن رحمت للعالمین کی آخری نشست میں نئے میر کارواں کا انتخاب عمل میں آیا، ڈاکٹر عقیل موسٰی نے ان سے ذمہ داری کا حلف لیا۔

گذشتہ رات مجلس عاملہ اور مجلس نظارت کے اجلاس منعقد ہوئے اور آج دن کا آغاز ہوتے ہوئے پاکستان بھر کے یونٹ صدور کے سامنے سابق مرکزی جنرل سیکرٹری قاسم شمسی اور سابق صوبائی صدر اویس رضا کے نام پیش کئے گئے۔ الیکشن سے پہلے سابق مرکزی صدر انصر مہدی نے اپنے کابینہ سمیت مستعفی ہونے کا اعلان کیا اور رائے شماری کے نتیجے میں مرکزی صدر منتخب ہوئے۔


مرکزی صدر منتخب ہونے کا اعلان کیا گیا تو پنڈال میں موجود امامیہ نوجوانوں نے والہانہ انداز میں ان کا استقبال کیا اور قاسم بھائی قدم بڑھائو، ہم تمہارے ساتھ ہیں، کے نعرے لگائے۔ نو منتخب مرکزی صدر نے شرکاء کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وطن عزیز کی جغرافیائی اور فکری سرحدوں کا تحفظ ہمارا منشور ہے اور ہم وطن کی جانب اٹھنے والی ہر میلی آنکھ پھوڑنے کا جذبہ رکھتے ہیں۔ آئی ایس او ملک کی نظریاتی و جغرافیائی سرحدوں کی محافظ ہے اور اپنے وطن کے دفاع کیلئے مصروف عمل ہے۔

News 24 November 2018

قوموں کی ترقی کا راز حصول علم میں پنہاں ہے:شرکاء تعلیمی کانفرنس

قوموں کی ترقی کا راز حصول علم میں پنہاں ہے:شرکاء تعلیمی کانفرنس۔

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے زیراہتمام رحمتہ للعالمین کنونشن کے دوسرے روز تعلیم درد مشترک کانفرنس منعقد ہوئی ۔کانفرنس میں ملک بھر کی جامعات سے ہزاروں طلبہ نے شرکت کی۔ کانفرنس سے ماہرین تعلیم ڈاکٹرثقلین، ماہر تعلیم، ڈاکٹر نثار ہمدانی، علامہ عقیل موسی ،مرکزی صدر آئی ایس او پاکستان انصر مہدی نے خطاب کیا۔

اس موقع پر آئی ایس او پاکستان کے مرکزی صدر کا کہنا تھا کہ آئی ایس او ،ملک میں آئیڈیل قیادت کے لئے کوشاں ہے تعلیمی کانفرنس بھی اسی سلسلہ کی ایک کڑی ہے ملک خداداد پاکستان کو جن چیلنجز کا سامنا ہے اس میں نوجوان طبقہ علم کے ذریعے اپنا بھرپور کردار ادا کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانفرنس کا مقصد طلبہ کو مختلف شعبہ ہائے تعلیم کے بارے میں آگاہ کرنا اور کیرئیر گائیڈنس دینا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ آئی ایس او نے ہمیشہ طلبہ کی ضروریات کو پیش نظر رکھا ہے اور یہ کنونشن ہر سال طلبہ کو جدید تعلیم کے حصول کا اشتیاق دلانے کے علاوہ دیگر اہم موضوعات کا احاطہ کرتا ہے ڈاکٹر ثقلین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دور حاضر میں وہی اقوام کامیاب اور غالب ہیںجو اقتصادیات، سیاست، بیوروکریسی، نظریہ اورتعلیم کے میدان میں اپنا اہم رول ادا کر رہی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ معاشرہ کے اہم ترین افراد یعنی تعلیم یافتہ نوجوان طبقہ کو اسلام کی تعلیمات سے دورکرنے کے لئے کالجز و یونیورسٹیز میں اسلام کی بنیادی نظریات کواساتذہ کی مدد سے نقصان پہنچایا جارہا ہے۔ نوجوانوں کو اپنی صلاحیتوں کو اجاگر کرتے ہوئے ملک کو بحرانوں سے نکالنا ہوگا ۔ماہر تعلیم ڈاکٹر نثار ہمدانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا تعلیم صرف جاب کرنے کے لئے نہیں بلکہ الہی اہداف کے حصول کیلئے ہے۔ آئی ایس او نے روز اول سے آج تک اس معاشرے کو نہ صرف بہترین تعلیم یافتہ نوجوان دیئے بلکہ اسلامی تعلیم کے ذریعہ تربیت یافتہ نوجوانوں کو اس معاشرے کو اسلامی معاشرہ بنانے کیلئے وہ افراد فراہم کئے جو آج استعماری ہتھکنڈوں کو سامنے ایک سیسہ پلائی ہوئی دیوار بن کر ان کا مقابلہ کر رہے ہیں۔

علامہ عقیل موسی نے کہا کہ وہ علم جو خدا کے قریب کرتا ہے وہی علم نافع ہے جو دور حاضر میں طلبہ کی ضرورت ہے مقررین نے کہا انسانیت اگر فلاح چاہتی ہے تو کامل ترین نظام یعنی اسلام پر عمل پیر اہوکر کامیابی کی طرف گامزن ہوسکتی ہے دور حاضر کے نوجوانوں کو اپنی ذمہ داری کا تعین کرتے ہوئے معاشرہ میں اپنا کلیدی کردار ادا کرنا ہوگا ۔ڈاکٹر نثار حمدانی نے تعلیمی کانفرنس کے شرکا سے خطاب میں کہا کہ پاکستان کا نظام تعلیم غربت اور جہالت کے خاتمہ میںناکام ہوچکا ہے ۔تعلیم کی اہمیت اپنی جگہ مسلمہ ہے مگر تربیت بھی تعلیم کا حصہ ہے جس کے بغیر تعلیم کا مقصد ادھورا رہ جاتا ہے، اس لیے تعلیم کے ساتھ مناسب عمر میں تربیت دینا ضروری ہے۔

پروفیسر سجاد حیدر کا کہنا تھا کہ بدقسمتی سے طلبہ یونیورسٹی سے وابستہ ہوتے ہی حقیقی تعلیم سے محروم ہوجاتے ہیں اور یہ تعلیم قائدانہ صلاحیتوں سے محروم ایک غافل انسان بنارہی ہے ہمیں ایسے تعلیمی نظام کی ضرورت ہے جو اچھائی میں اضافے اور برائی کے خاتمے میں کردار ادا کرسکے ۔تعلیم کا نطام آفاقی ہو جس میں مغربی دنیا کی دلچسپی اور مشرقی افکار بھی شامل ہو الہیٰ انسان کی خصوصیات پر مشمل ہو جس کے لئے ہمیں عملی اقدامات کرنے ہوں گے۔

News 20 November 2018

لاپتہ افراد کی بازیابی تک چین سے نہیں بیٹھیں گے ، آئی ایس او کی میزبانی میں اجلاس

مسنگ پرسن پوری قوم کا مسئلہ ہے،شرکاء اجلاس

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی سیکرٹریٹ میں ملی جماعتوں کا اجلاس ہوا ۔اجلاس کی صدارت مرکزی صدر آئی ایس او پاکستان برادر انصر مہدی نے کی ۔اجلاس میں
مشترکہ طور پہ طے پایا کہ اتوار کو لاہور میں لاپتہ افراد کی بازیابی اور ملک میں جاری دہشت گردی و انتہا پسندی کے خلاف صدائے احتجاج بلند کرنے کے لئے استحکام پاکستان ریلی کا انعقاد کیا جائے گا۔

اجلاس میں استحکام پاکستان ریلی کے انتظامات کا حتمی جائزہ بھی لیا گیا۔اجلاس میں طے پایا کہ آئی ایس او پاکستان کے سالانہ کنونشن کے بعد3بجے ناصر باغ سے اسمبلی ہال تک ریلی نکالے جائے گی ریلی میں تمام ملی جماعتوں کے کارکنان شریک ہوکر مسنگ پرسنز اور اسیران کی بحالی کا مطالبہ کریں گے ۔اجلاس میں طے پایا کہ تمام آئمہ جمعہ و جماعت کو
بھی ریلی میں لاہور بھر سے کثیر تعداد میں شرکت کو یقینی بنانے کے لئے اعتماد میں لیا جائے گا۔

مرکزی صدر آئی ایس او پاکستان برادر انصر مہدی کا کہنا تھا کہ مسنگ پرسن پوری قوم کا مسئلہ ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ محبان محمد و آل محمد ۖ مملکت خداداد پاکستان میں قانون کی بالادستی کا مطالبہ کرتے ہوئے لاپتہ افراد کی فوری بازیابی کے لئے اتحاد و وحدت کی اس عظیم مثا ل کو قائم رکھیں ۔ملت کے افراد کی جبری گمشدگی کسی شیعہ تنطیم یا جماعت کا مسئلہ نہیں، بلکہ پوری ملت کا اجتماعی مسئلہ ہے، اس کے حل کیلئے تمام جماعتوں کو میدان عمل میں نکلنا چاہیے، لاپتہ افراد کی بازیابی کے معاملے پر مزید خاموشی ملت کے مفادات کے برعکس سمجھی جائے گی۔

اجلاس میں شریک تمام جماعتوں کے نمائندوں کا کہنا تھا کہ جب تک محب وطن لاپتہ افراد بازیاب نہیں ہوجاتے ہم چین سے نہیں بیٹھیں گے ۔ہم اس غیر آئینی قدم کے خلاف صدائے احتجاج بلند کرتے رہیںگے پاکستا ن کے محب وطن شہری ہیں اور چاہتے ہیں پاکستان میں قانون و آئین کی بالادستی ہو۔ شرکاء اجلاس نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ قانون نافذ کرنے والے اور سکیورٹی ادارے ملکی قوانین پرعمل پیرا ہوتے ہوئے اسیران کو عدالتوں میں پیش کریں۔اجلاس میں تحریک بیداری سے رضوان عابدی،احمد رضاخان،امامیہ آرگنائزیشن سے برادر سجاد،برادربزرگوار احمد رضاخان،حسنین زیدی،مرکزی نائب صدر جمیل طوری مرکزی سیکرٹری اطلاعات نسیم کربلائی،سابق مرکزی صدر تہور حیدری اور عادل بنگش نے شرکت کی ۔

News 20 November 2018

کنونشن اتحاد و وحدت کیلئے سنگ میل ثابت ہوگا،جمیل طوری

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی سیکرٹریٹ لاہور میں تنظیم کے مرکزی صدر کی سربراہی میں اجلاس منعقد ہوا۔

اجلاس میں چیئرمین کنونشن نے شرکا کو بتایا کہ ملک بھر کے تمام ڈویژن میں مرکزی عہدیدران کے دورہ جات کا سلسلہ مکمل ہو چکا ہے، رابطہ مہم میں فعال اراکین اور سابقین کو کنونشن میں شرکت کیلئے مدعو کیا گیا ہے۔

 

چیئرمین جمیل طوری نے بتایا کہ تین روزہ کنونشن 23 نومبر سے مرقد شہید ڈاکٹر محمد علی نقوی پر شروع ہوگا، کنونشن میں طلبہ کے فکر و شعور کی بلندی اور اعلی اخلاق سے مزین رکھنے کیلئے مختلف پروگرامات منظم کئے جا رہے ہیں جبکہ کنونشن کے پہلے وز شہدا ءخراج عقیدت پیش کرنے اور انکی یاد کو تازہ کرنے کیلئے "شبِ شہدا" کا اہتمام کیا جائے گا اور ڈاکٹر محمد علی نقوی شہید کی قبر پر اسکائوٹ سلامی ہو گی جس میں شہدا کی فیمیلز بھی شرکت کریں گی۔

جمیل طوری نے شرکاء اجلاس کو تایا کہ کنونشن میں ملک بھر سے ہزاروں طلبا سمیت سینئرز سابقین علما ءکرام شرکت کریں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ کنونشن کے تیاریاں مکمل کر لی گئی ہیں۔ مرکزی صدر انصر مہدی کا کہنا تھا کہا آ ئی ایس او کا مرکزی سالانہ 47 واں رحمة للعالمین کنونشن تنظیم کی فعالیت کا آئینہ دار ہونے کے علاوہ اتحاد و وحدت کیلئے سنگ میل ثابت ہوگا۔

کنونشن کے ایجنڈے کے بارے مزید بتایا کہ عالمی کانفرنس بعنوان رحمتہ للعالمین ہفتہ کو منعقد ہوگی جس میں ملک و بیرون ملک سے شیعہ سنی علماکرام سمیت اہم شخصیات کی شرکت متوقع ہے۔ کنونشن کے دوسرے روز جشن صادقین کا انعقاد ہوگا جس میں معروف منقبت خواں مقدس کاظمی،عاطر رضوی،زوار بسمل منقبت خوانی کریں گے۔ کنونشن کے آخری روز مرکزی صدر کا انتخاب و اعلان جبکہ دیگر اہم پروگرامات میں سابقین اجتماع، محبین کنونشن تعلیمی کانفرنس اور استحکام پاکستان ریلی شامل ہیں۔

News 23 October 2018

عزاداری پہ ہرگز آنچ نہیں آنے دیں گے ،مرکزی صدر

پولیس میں چھپی کالی بھیڑوں کو بے نقاب کیا جائے ،مرکزی صدر

بہاولنگر کے نواحی چک میں مجلس عزا پر پولیس گردی، لاہور میں مجالس کے انعقاد پر بانیاں کیخلاف مقدمات کے اندراج کیخلاف لاہور کی مال روڈ پر پنجاب اسمبلی کے سامنے شیعہ جماعتوں کی جانب سے احتجاجی دھرنا دیا گیا ۔

دھرنا سے امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی صدر خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عزاداری سید الشہدا ہماری شہ رگ ہے، اس پر قدغن کسی صورت برداشت نہیں کریں گے۔ مرکزی صدر نے مزید کہا کہ عزاداری امام حسین کے خلاف سازشوں پہ خاموش نہیں بیٹھیں گے فورٹ عباس میں جس طرح سے مجلس عزاء میں شریک خواتین کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا گیا اس کی ماضی میں مثال نہیں ملتی۔

انصر مہدی کا مزید کہنا تھا کہ عزاداری امام حسین کے خلاف کسی سازش اور پابندی کو قبول نہیں کریں گے یہ ہمارا آئینی اور بنیادی حق ہے ۔انہوں نے کہا ہم نے سیکڑوں لاشوں کااٹھا کر بھی قانون کو ہاتھ میں نہیں لیا ہمارے نوجوانون کو اسیر اور جبری طور پہ اغواء کیا گیا اور ہماری ٹارگٹ کلنگ کی گئی ۔محب وطن شہریوں کے ساتھ پولیس میں چھپی کالی بھیڑوں کے روئیے پر قانون نافذ کرنے والے اداروں کو کردار ادا کرنا ہوگا تاکہ آئندہ فورٹ عباس جیسے واقعات رونما نہ ہوں۔

دھرنے کے دوران وزیر قانون کی ہدایت پر پولیس کے اعلی افسران نے فوری نوٹس لیتے ہوئے ایس ایچ او کو معطل کرنے کا حکم دیدیا جبکہ واقعہ کی انکوائری کیلئے کمیٹی تشکیل دیتے ہوئے بانیان مجالس کیخلاف درج کئے گئے مقدمات بھی فی الفور ختم کرنے کے احکامات جاری کر دیئے۔

مطالبات منظور ہونے پر قائدین نے پنجاب اسمبلی کے سامنے جاری دھرنا ختم کرنے کا اعلان کر دیا، اس موقع پر شہادت حضرت بی بی سکینہ کی مجالس سے مجلس عزا بھی برپا کی گئی اور اعلان کیا گیا کہ آئندہ ہر سال بہاولنگر میں یہ مجلس باقاعدگی سے ہوا کرے گی جس پر پولیس کی جانب سے حملہ کیا گیا تھا۔ دھرنا ختم ہونے کے اعلان کے بعد شرکا پر امن طور منتشر ہوگئے۔

News 21 October 2018

آئی ایس او پاکستان کا 47واں رحمة للعالمین کنونشن بانی تنظیم کے مرقد پہ لاہور میں ہوگا

آئی ایس او پاکستان کا سالانہ مرکزی کنونشن 23نومبر کو بانی تنظیم شہید ڈاکٹر محمد علی نقوی کے مرقد پہ ہوگا ان خیالات کا اظہار امامیہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی نائب صدر جمیل طوری نے لاہور میں اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا ۔

اجلاس میں طے پایا کہ کنونشن کی رابطہ مہم کا آغاز آئندہ ہفتے سے کیا جائے گا رابطہ مہم کے تحت ملک بھر میں فعال اراکین اور سابقین کو کنونشن میں شرکت کیلئے مدعو کیا جائے گا۔

چئیرمین کنو نشن جمیل طوری نے بتایا کہ تین روزہ'' سالانہ رحمتة للعالمین کنونشن"' میں طلبا کے فکر و شعور کی بلندی اور اعلی اخلاق سے مزین رکھنے کیلئے مختلف پروگرامات
منظمکئے جا رہے ہیں۔

کنونشن میں ملک بھر سے ہزاروں طلبا سمیت سینئرز سابقین علما شرکت کریں گے، 25 نومبرکنونشن کے آخری روز مرکزی صدر کا انتخاب و اعلان کیا جائے گا۔

جمیل طوری کا کہنا تھا کہ آئی ایس او کا مرکزی کنونشن تنظیم کی فعالیت کا آئینہ دار ہونے کے علاوہ اتحاد و وحدت کیلئے سنگ میل ثابت ہو گا۔ اجلاس میں مرکزی عہدیدران نے شرکت کی۔

News 08 October 2018

آئی ایس او کا سالانہ "رحمة للعالمین کنونشن" 23نومبر کو لاہور میں ہوگا

آئی ایس او ملک میں آئیڈیل قیادت کے لئے کوشاں ہے،جمیل طوری

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے زیراہتمام مرکزی کنونشن کے دوسرے تعلیمی سیمینار بعنوان ایجوکیشنل فیئر منعقد ہوگا۔ان خیالات کا اظہارچیئرمین کنونشن جمیل طوری نے لاہور میں اجلاس کی سربراہی کرتے ہوئے کیا ان کا مزید کہنا تھا کہ آئی ایس او پاکستان ملک میں آئیڈیل قیادت کے لئے کوشاں ہے تعلیمی سیمیناربھی اسی سلسلہ کی ایک کڑی ہے ملک خداداد پاکستان کو جن چیلنجز کا سامنا ہے اس میں نوجوان طبقہ علم کے ذریعے اپنا بھرپور کردار ادا کر سکتا ہے۔

جمیل طوری کا کہنا تھا کہ رحمة للعالمین کنونشن 24,25،23 نومبر کو لاہور میں ہوگا جس میں ملک بھر سے تعلیمی اداروں کے ہزاروں امامیہ طلبہ، علمائے کرام، وکلا حضرات، انجنئیرز، دانشور اور طلبا شریک ہونگے۔

News 30 September 2018

آئی ایس او پاکستان کے تحت ملک کی اہم جامعات میں یوم حسین ؑ کا انعقاد جاری

آئی ایس او پاکستان کے تحت ملک کی اہم جامعات میں یوم حسین ؑ کا انعقاد جاری۔

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی سیکرٹریٹ لاہور میں مرکزی صدر انصر مہدی کی مرکزی عہدیدران کے ساتھ ایک اہم نشست ہوئی جس میں محرم الحرام کے دوسرے اور تیسرے عشرہ بعنوان حسین شناسی کے حوالے سے ملک بھر کی جامعات میں یوم حسین کے سلسلہ میں ہونے والی تقریبات کا جائزہ لیا گیا۔

مرکزی جنرل سیکرٹری قاسم شمسی کا کہنا تھا کہ ملک کے تعلیمی اداروں میں آئی ایس او پاکستان کے زیراہتمام یوم حسین کی تقریبات شروع ہو گئی ہیں، جامعات میں یوم حسین کا انعقاد نواسہ رسول ۖ کے مشن کو آگے بڑھانا مقصود ہے امام حسین کسی گروہ یا فرقے کے نہیں، پوری انسانیت کے امامؑ ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ یوم حسین کی تقریبات میں ماہرین تعلیم، پروفیسرز، تمام مکاتب فکر اور مسالک کے علما اور طلبا و طالبات حضرت امام حسین کی شان میں اپنی عقیدت کا اظہار کریں گے۔

News 29 September 2018

آئی ایس او پاکستان کے تین روزہ کنونشن کا آغاز 23 نومبر سے لاہور میں ہوگا

آئی ایس او پاکستان کے تین روزہ کنونشن کا آغاز 23 نومبر سے لاہور میں ہوگا

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی صدر انصر مہدی کی سربراہی میں مرکزی دفتر میں مرکزی کابینہ کا اجلاس ہوا اجلا س میں مرکزی کنونشن کی تاریخ اور مقام کو زیر بحث لایا گیا ۔

اجلاس میں طے پایا کہ تنظیم کا سالانہ کنونشن نومبر کے آخری ہفتے لاہور میں ہوگا مجلس عاملہ کی کثرت رائے سے منتخب چئیرمین کنونشن جمیل طوری کا کہنا تھا کہ کنونشن کا آغاز 23 نومبر کو لاہور میں ہونا طے پایا ہے.

تین روزہ کنونشن میں ملک بھر سے تعلیمی اداروں کے ہزاروں امامیہ طلبہ، علمائے کرام، وکلا حضرات، انجنئیرز، دانشور اور طلبا شریک ہونگے۔ کنونشن کے اہم پروگرامات میں تعلیمی سیمینار بعنوان ایجوکیشنل فئیر، محفل دوستان، اسٹڈی سرکلز، شب شہدا ،محفل میلاد مصطفیۖ اور محب کنونشن سمیت نئے مرکزی صدر کا انتخاب و اعلان اور ریلی شامل ہیں۔

Picture Gallery